دستور المرکبات
 

معجون مصفّیٖ خون
افعال و خواص اور محل استعمال
فساد خون، خارِش، پھوڑے، پھنسی میں مفید ہے۔

جزءِ خاص
پوست بیخ نیم۔

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
پوست بیخ نیم، پوست شاخ انجیر دشتی، شاہترہ، چرائتہ کشنیزخشک، پوست ہلہل زرد، پوست ہلیلہ کابلی، پوست ہلیلہ، بلیلہ سیاہ ، آملہ، شیطرج ہندی بادیان، گلِ سُرخ ، سناء مکی۔ ہم وزن ادویہ کو کوٹ چھان کر قند سفید سہ چند کے قوام میں ملائیں اور مرکب تیار کر کے کام میں لائیں۔

مقدار خوراک
۱۰ گرام(صبح و شام)۔

معجون مغلِّظ
افعال و خواص اور محل استعمال
مغلِّظ منی، مقوی باہ ہے۔ سُرعتِ انزال، جریان اور کثرت احتلام کو فائدہ دیتی ہے۔

جزءِ خاص
مغز بادام۔

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
مصطگی ۲ گرام ، علک البطم ۳ گرام، کتیرا، صمغ عربی ، طباشیر، اِلائچی،خرد نشاستہ، ثعلب مصری۔ ہر ایک ۴ گرام،مغز چلغوزہ ۱۲ گرام، نارجیل ۱۸ گرام، مغز بادام شیریں ۲۵ گرام کوٹ چھان کر سہ چند شہد خالص یا قند سفید کے قوام میں ملائیں۔

مقدار خوراک
۱۰ گرام ہمراہ شیر گاؤ۔

معجون الملوک/ملوکی
وجہ تسمیہ
اِس کو معجون ملوکی بھی کہتے ہیں۔ ملوک مَلِک کی جمع ہے جس کے معنی بادشاہ کے ہیں۔ یہ معجون قدیم بادشاہ کی طرف منسوب ہے۔یا یہ کہ نازک و لطیف اور شاہی مزاج کے حامل اشخاص کے لئے تیار کی گئی ہے۔

افعال و خواص اور محل استعمال
مقوی باہ اور مقوی معدہ ہے۔

جزءِ خاص
زعفران

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
اِلائچی خرد، کندر۔ ہر ایک ۵ گرام ، اُشنہ ۱۰ گرام، جائفل، قرنفل ، جاوتری، اِندر جو شیریں ، بیخ اذخر، زنجبیل ، دار چینی، مصطگی، زعفران، عود، ہر ایک ۱۲ گرام۔ تمام ادویہ کو کوٹ چھان کر قند سفید ۴۰ گرام کو عرقِ گلاب ۴۰ ملی لیٹر میں حل کر کے دو چند شہد کے قوام میں ملائیں اور حسبِ موقع و ضرورت استعمال میں لائیں۔

مقدار خوراک
۵ تا ۷ گرام۔

معجون مُمْسِک
افعال و خواص اور محل استعمال
قوتِ امساک کو بڑھاتی ہے اور مغلِّظِ منی ہے۔جَریَان اور سرعتِ انزال کو دور کرتی ہے۔

جزءِ خاص
افیون خالِص۔

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
افیون خالِص ،جائفل، جاوِتری،فلفل سیاہ، زنجبیل، تج قلمی ۶۔۶ گرام۔ تمام ادویہ کو کوٹ چھان کر شہد خالص سہ چند کا قوام تیار کریں۔ بعد ازاں ، مشک خالص، زعفران خالص ۳۔۳ گرم کسی عرق میں حل کر کے معجون میں شامل کر دیں۔

مقدار خوراک
۲۵۰ ملی گرام تا ایک گرام، صبح و شام ہمراہ شیر گاؤ۔

معجون موچرس
وجہ تسمیہ
اپنے جزءِ خاص ، موچرس کے نام سے موسوم ہے۔

افعال و خواص اور محل استعمال
نافع سیلان الرَّحم، مقوی رحم، مصلح رحم۔حابس رطوباتِ رحم۔

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
موچرس ، چکنی سپاری، طباشیر، نشاستہ، مازو، گلِ سُرخ، حب الاس، ہلیلہ، بلیلہ، آملہ، گِلِ مختوم، موسلی سیاہ و سفید ۵۔۵ گرام،پوست انار۸ گرام۔ تمام ادویہ کو کوٹ چھان کر آبِ بہی، آبِ انار تُرش ۲۵۔۲۵ ملی لیٹراور نبات سفید دو چند کے قوام میں مرکب کریں۔

مقدار خوراک
دس گرام ہمراہ شیر گاؤ۔

معجون نجاح
وجہ تسمیہ
اپنے کامیاب افعال اور افادیت تام کی وجہ سے اِس نام سے موسوم ہوئی۔

افعال و خواص اور محل استعمال
جنون و مالنخو لیا اور دیگر سوداوی امراض میں مفید ہے۔ جذام، وجع المفاصل اور صرع میں نہایت مفید و موثر ہے۔اختناق الرَّحم (Hysteria ) کی مخصوص اور موثّر دواء ہے۔

جزءِ خاص
بسفائج فستقی۔

دیگر اجزاء مع طریقۂ تیاری
افتیمون وِلایتی، اسطوخودوس، تربد مجوّف خراشیدہ ۱۵۔۱۵ گرام۔ ہلیلہ سیاہ،بلیلہ ، آملہ مقشر، ۳۵۔۳۵ گرام، تمام ادویہ کو کوٹ چھان کر سہ چند شہد خالص کے قوام میں مرکب بنائیں۔

مقدار خوراک
۵ تا ۷ گرام۔